Latest Post
Loading...

Jis Baat Ka Hadsha Tha Wahi Baat Hoi,Tanhaai Mein Phir Khud Se Mulaqaat Hoi

جس بات کا خدشہ تھا وہی بات ہوئی ہے
تنہائی میں پھر خود سے ملاقات ہوئی ہے

میں عشق کے زنداں میں اکیلا تو نہیں ہوں
پابندِ سلاسل وہ مرے ساتھ ہوئی ہے

برہم ہے وہ کیوں جانیے منزل پہ پہنچ کر
لگتا ہے کہ رستے میں کوئی بات ہوئی ہے

میں کم سن و کج فہم ہوں، نا اہل ہوں لیکن
تُو یہ تو بتا تجھ کو کبھی مات ہوئی ہے

اُس نے کہا سلمان تمہیں میری قسم ہے
گھر لوٹ چلو تم کہ بہت رات ہوئی ہے

0 comments:

Post a Comment

 
Toggle Footer