Latest Post
Loading...

Main Safar Mein Tha,Main Safar Mein Hon,Mujhe Qurbaton Ki Khabar Kahan


میں سفر میں تھا، میں سفر میں ہوں مجھے قربتوں کی خبر کہاں
جسے راستوں کا پتہ نہیں اسے منزلوں کی خبر کہاں

مرے بے خبر! تجھے کیا خبر، کہاں رہ گیا ترا ہمسفر
تجھے اپنی ذات عزیز ہے تجھے دوستوں کی خبر کہاں

تُو عروج ہے میں زوال ہوں، تُو یقین ہے میں گمان ہوں
یہ ہمارا رشتہ اٹوٹ ہے، ہمیں فاصلوں کی خبر کہاں

ہونہی کٹ گئے مرے روز و شب، تجھے کیسے کوئی بتائے اب
ترے ہجر میں جو ملے مجھے، تجھے ان دکھوں کی خبر کہاں

مجھے تجھ سے کوئی گلہ نہیں، مجھے حوصلہ ہی ملا نہیں
مرے مہربان تجھے بھلا مری خواہشوں کی خبر کہاں


0 comments:

Post a Comment

 
Toggle Footer