Latest Post
Loading...

Be Chen Hawa Mat Bol Piya K Lahje Mein Mera Dil Na Jala Mat Bol Piya K Lahje Mein


شاعر فرحت عباس شاہ
بک مت بول پیا کے لہجے میں
صفحہ 19
20
انتخاب
عروسہ ایمان
بے چین ہوا مت بول پیا کے لہجے میں
مرا دل نہ جلا مت بول پیا کے لہجے میں
مرا دل کٹتا ہے اس کی صدا کے شک پر بھی
کچھ خوف ۓ خدا مت بول پیا کے لہجے میں
مجھے اس کی خوشبو ہجر کے زخم پہ لگتی ہے
اے باد ۓ صبا مت بول پیا کے لہجے میں
میں پہلے ہی برباد ہوں اس دل کے ہاتھوں
مجھے غم نہ لگا مت بول پیا کے لہجے میں
دکھ بول رہا تھا بالکل اس کے لہجے میں
پھر میں نے کہا مت بول پیا کے لہجے میں

 

Poet Farhat Abbas Shah

Be Chen Hawa Mat Bol Piya K Lahje Mein

Mera Dil Na Jala Mat Bol Piya K Lahje Mein

Mera Dil Kat'Ta Hai Us Ki Sada K Shak Par Bhi

Kuch Khoaf-E-KHUDA Mat Bol Piya K Lahje Mein

Mujhe Us Ki Khushboo Hijar K Zakham Pe Lagti Hai

Ay Baad-E-Saba Mat Bol Piya K Lahje Mein

Main Pehle Hi Barbaad Hon Is Dil K Haathoon

Mujhe Gham Na Laga Mat Bol Piya K Lahje Mein

Dukh Bol Raha Tha Baalkul Us K Lahje Mein

Phir Main Ne Kaha Mat Bol Piya K Lahje Mein


0 comments:

Post a Comment

 
Toggle Footer