Latest Post
Loading...

Qismat Ki Turap Chaal Mein Shetan Kia Kare,Adam K La-Ubal Mein Shetan Kia Kare (Razab Tabraiz)


قسمت کی ترپ چال میں
شیطان کیا کرے
آدم کے لا ابال میں
شیطان کیا کرے
خیالی کاروبار میں
مصروف ہر بےکار
بےکار کے خیال میں
شیطان کیا کرے
مجزوب میں تماش بینی
سوچنا گناہ
یار کی دهمال میں
شیطان کیا کرے
نیکیوں کی آڑ
میں کمال_مفلسی
مفلسی کمال میں
شیطان کیا کرے
آسان میں محال
میں مشیت_خدا
آسان اور محال میں
شیطان کیا کرے
حسن کی چنگیر میں
کشش کی روٹیاں
روٹیوں کے تهال میں
شیطان کیا کرے
ہوس میں لکھ دیا گیا
عقل کا انتقال
عقل کے انتقال میں
شیطان کیا کرے
یسوع کا جس زمانے
میں نشان نہ ملے
اس دور کے دجال میں
شیطان کیا کرے
ہر اختتام_ظلم میں
خاموش تالیاں
تالیوں کی تال میں
شیطان کیا کرے
شراب کے فروغ
میں ابلیس لامحال
لہو کے استعمال میں
شیطان کیا کرے
چہروں کے نام پر اسے
بہروپ بے شمار
رزب پهر اصل حال میں
شیطان کیا کرے
(رزب تبریز)

0 comments:

Post a Comment

 
Toggle Footer