Latest Post
Loading...

Kabhi Iss Nagar Tujhe Dekhna,Kabhi Uss Nagar Tujhe Dhoondna


کبھی اِس نگر تجھے دیکھنا، کبھی اْس نگر تجھے ڈھونڈنا
کبھی رات بھر تجھے سوچنا، کبھی رات بھر تجھے ڈھونڈنا
مجھے جا بجا تری جْستجوْ، تْجھے ڈھونڈتا ہوں میں کوْ بکوْ
کہاں کھل سکا ترے روْ برو ، مرا اِس قدر تجھے ڈھونڈنا
مرا خواب تھا کہ خیال تھا، وہ عروج تھا کہ زوال تھا
کبھی عرش پر تْجھے دیکھنا ، کبھی فرش پر تجھے ڈھونڈنا
یہاں ہر کسی سے ہی بیر ہے، ترا شہر قریہء غیر ہے
یہاں سہل بھی تو نہیں کوئ ، مرے بے خبر تجھے ڈھونڈنا
تری یاد آئ تو رو دیا، جو تْو مل گیا تجھے کھو دیا
میرے سلسلے بھی عجیب ہیں، تْجھے چھوڑ کر تجھے ڈھونڈنا
یہ مری غزل کا کمال ہے، کہ تری نظر کا جمال ہے
تجھے شعر شعر میں سوچنا، سرِ بام و در تجھے ڈھونڈنا

Kabhi Iss Nagar Tujhe Dekhna,Kabhi Uss Nagar Tujhe Dhoondna

Kabhi Raat Bhar Tujhe Sochna,Kabhi Raat Bhar Tujhe Dhoondna

Mujhe Ja-Baja Teri Justajo,Tujhe Dhondta Hon Main Koo-Bakoo

Kahan Khul Saka Tere Ro-Baro,Mera Iss Qadar Tujhe Dhoondna

Mera Khuwaab Tha Keh Khayaal Tha,Wo Urooj Tha Keh Zawaal Tha

Kabhi Arsh Pe Tujhe Dekhna,Kabhi Farsh Par Tujhe Dhoondna

Yahan Har Kisi Se Hi Bair Hai,Tera Shehr Qarya-e-Ghair Hai

Yahan Suhl Bhi Tou Nahi Koi,Mere Be-Khabar Tujhe Dhoondna

Teri Yaad Aai To Ro Dia,Jo Tuu Mil Gaya Tujhe Kho Diya

Mere Silsiley Bhi Ajeeb Hain,Tujhe Chod Kar Tujhe Dhoondna

Ye Meri Ghazal Ka Kamal Hai,Keh Teri Nazar Ka Jamaal Hai

Tujhe Shair Shair Mein Sochna,Sar-e-Baam-o-Dar Tujhe Dhoondna


0 comments:

Post a Comment

 
Toggle Footer