Latest Post
Loading...

Khud Bik Rahy Hain Aa Ke Khareedar-e-Mustafa,Dil Hai Mera Khazeena Israr-e-Mustafa (Bedam Shah Warsi)


کلام بیدم شاہ وارثی
کتاب مصحف بیدم
خود بک رہے ہیں آ کے خریدار مصطفےٰ

دل ہے مرا خزینہ اسرارِ مصطفےٰ
آنکھیں ہیں دونوں روزنِ دیوار مصطفےٰ

پھیلا ہوا ہے چاروں طرف دامنِ نگاہ
اور لُٹ رہی ہے دولتِ دیدارِ مصطفےٰ

تفسیر مصحفِ رخِ پر نور والضحیٰ
والیل شرح گیسوئے خمدارِ مصطفےٰ

نعلین پا سے عرش معلیٰ کو ہے شرف
روح الا میں ہیں غاشیہ بردارِ مصطفےٰ

کیونکر نہ سجدہ پیش رح مصطفے ٰکروں
طاقِ حرم ہے ابروئے خمدار مصطفےٰ

بیدم نہ آوں جا کہ دیار رسول سے
تربت ہو زیر سایہ دیوارِ مصطفےٰ

0 comments:

Post a Comment

 
Toggle Footer