Latest Post
Loading...

Mansoob Thay Jo Log Meri Zindagi Ke Saath Aksar Voh Hi Milay Hein Barri Be-Rukhi Ke Saath


Mansoob Thay Jo Log Meri Zindagi Ke Saath
Aksar Voh Hi Milay Hein Barri Be-Rukhi Ke Saath
Yun Toh Mein Hans Parra Hun Tumhaare Liye Magar
Kitney Sitaare Tuut Parrey Ek Hansi Ke Saath
Majbooriyon Ki Baat Chali Hai Toh Mai Kahan
Hum Ne Piya Hai Zehr Bhi Aksar Khushi Ke Saath
Chehre Badal Badal Ke Mujhe Mil Rahe Hein Log
Itna Bura Sulook Meri Saadgi Ke Saath

‎منسوب تھے جو لوگ میری زندگی کےساتھ
‎ اکثر وہی ملے ہیں بڑی بے رُخی کے ساتھ
‎ یوں تو مَیں ہنس پڑا ہُوں تمہارے لیے مگر
‎ کتنے ستارے ٹوٹ پڑے اِک ہنسی کے ساتھ
‎ مجبوریوں کی بات چلی ہے تو مئے کہاں
‎ ہم نے پِیا ہے زہر بھی اکثر خوشی کے ساتھ
‎چہرے بدل بدل کے مجھے مل رہے ہیں لوگ
‎اتنا بُرا سلوک میری سادگی کے ساتھ

0 comments:

Post a Comment

 
Toggle Footer