Latest Post
Loading...

Na Jane Is December Mein Kise Tum Shaal Pehnaao?


شاعرہ الماس شبی
انتخاب فاروقی.54
نا جانے اس دسمبر میں
کسے تم شال پہناؤ؟
اور اپنے سرد ہاتھوں سے
تم اس کے گال چھو کر
یقیں اس کا دلاؤ گے
کہ تم ہو صرف میری
میں تمہارا ہوں

Poettes Almaas Shabi
Type By
*_FAROOQI.54_*
Na Jane Is December Mein
Kise Tum Shaal Pehnaao?
Aur Apne Sard Hathoon Se
Tum Us K Gaal Ko Chhoo Kar
Yaqeen Is Ka Dilaao Ge
Keh Tum Ho Sirf Meri
Main Tumhara Hoon

0 comments:

Post a Comment

 
Toggle Footer