Latest Post
Loading...

Zehin Mein Us Ke Bhala Baat Ye Aai Kaisi Khuwaab Dafnate Hoe Rasm-e-Hinayi Kaisi


ذہن میں اس کے بھلا بات یہ آئی کیسی
خواب دفناتے ہوئے رسمِ حنائی کیسی

اس طرح مجھ سے لپٹ کر مجھے رخصت نہ کرو
تم مرے دل میں ہو پھر تم سے جدائی کیسی

لامکاں، کون و مکاں، دونوں جہاں کچھ بھی نہیں
دلِ انسان میں پھر تیری سمائی کیسی

تیرا برتاؤ جو دیکھا تو یہ احساس ہوا
ایک انسان کی ہوتی ہے خدائی کیسی

آہ بھرنے سے فزوں ہوتی ہے، رونے سے زیاد
تم نے یہ آگ محبت کی لگائی کیسی

0 comments:

Post a Comment

 
Toggle Footer